توتتوری: کیکڑا شائقین کی جنت
کیکڑے کے شکار میں توتتوری پریفیکچر جاپان میں پہلے نمبر پر ہے۔ گرانقدر برفانی کیکڑا، جسے مقامی طور پر ماتسوبا کہتے ہیں، اور قدرے کم مہنگا سرخ برفانی کیکڑا، خاص طور سے مقبول ہیں۔ بہت سے سیاح ان کے بہترین موسم یعنی موسم سرما میں انکا لطف لینے یہاں آتے ہیں۔ اس بار ہمارے نامہ نگار ڈینئل وولپرٹ اس موسم سرما کی سوغات کا کئی طرح سے مزہ لیتے ہیں، مثلاً جی بھر کر کھائیے بوفے سے لیکر اعلیٰ درجے کے کثیر ڈش ڈنر میں۔ وہ ایک ایسی شاپنگ اسٹریٹ میں چہل قدمی بھی کرتے ہیں جہاں مانگا مجسمے گاہکوں کے لیے باعث کشش ہیں۔
ڈینئل وولپرٹ
ساکائی ماہی گیر بندرگاہ، جو توتتوری کے شمال مغربی سرے پر ساکائی میناتو شہر میں واقع ہے، جاپان میں سرخ برفانی کیکڑے اتارے جانے کی سب سے بڑی بندرگاہ ہے۔
میزوکی شیگیرو سڑک، ایسا خریداری مرکز ہے جس کو اسی شہر میں پرورش پانے والے تاریخی مانگا فنکار میزوکی شیگیرو کے فن پاروں نے جلا بخشی ہے۔ جے آر ساکائی میناتو اسٹیشن سے شروع ہو کر آٹھ سو میٹر تک جانے والی اس سڑک کی اطراف اس مصنف کی خیال دنیا یوکائی کے کرداروں پر مشتمل کانسی کے 177 مجسمے نصب ہیں۔
وسطی توتتوری کے پہاڑوں میں میساسا گرم چشمہ، زمانہ قدیم سے شافی تاثیر کے لیے مشہور ہے۔ کہا جاتا ہے کہ اس میں غسل لینے سے تیسری صبح شفا مل جاتی ہے۔ یہاں کے جاپانی انداز کے ہوٹلوں میں لذیز برفانی کیکڑا عشائیے کا لطف بھی اٹھایا جا سکتا ہے۔