فائزر ویکسین کی دوسری کھیپ جاپان پہنچ گئی

جاپان نے امریکی ادویات ساز ادارے فائزر کی تیار کردہ کورونا وائرس ویکسین کی دوسری کھیپ وصول کرلی ہے۔

یہ کھیپ ٹوکیو کے نزدیک واقع ناریتا ہوائی اڈے پر اتوار کے روز بیلجیئم سے پہنچی ہے۔

خصوصی ڈبوں میں خشک برف کے ساتھ رکھی گئی ویکسین کی خوراکوں کو ایک گودام میں پہنچایا گیا۔ اس کے بعد انہیں ٹرک کے ذریعے ہوائی اڈے سے باہر ذخیرہ کرنے کے ایک مرکز پر بھیجا گیا ہے۔

اس سے پہلے، پہلی کھیپ12 فروری کو آئی تھی۔ حکومتی عہدیداروں کا کہنا ہے کہ اگر ہر شیشی میں سے زیادہ سے زیادہ 6 خوراکیں نکالی جا سکیں تو تازہ ترین کھیپ میں 4 لاکھ 50 ہزار سے زیادہ خوراکیں ہوں گی۔

ان دونوں کھیپوں کی آمد کے بعد اب تک جاپان میں لگ بھگ 8لاکھ 38 ہزار خوراکیں یا تقریباً 4 لاکھ 20 ہزار افراد کے لئے ویکسین پہنچ چکی ہے۔

حکومت کا منصوبہ ہے کہ طبی عملے کو لگانے کے لیے 11 لاکھ 70 ہزار خوراکیں پہلی مارچ سے دو ہفتوں کے دوران پریفکچروں میں تقسیم کر دی جائیں۔

اس کا منصوبہ ہے کہ یورپی یونین کی جانب سے اجازت ملتے ہی اضافی خوراکیں بذریعہ طیارہ منگوا لی جائیں۔

طبی دیکھ بھال کے ذمہ دار ایسے کارکن جنہیں ترجیحاً ویکسین لگائی جانی ہے، انکی ابتدائی تخمینہ کردہ تعداد لگ بھگ 37 لاکھ میں تقریباً 10 لاکھ کا اضافہ ہونے کا امکان ہے۔

اگر جاپان کو ویکسین کی فراہمی ہموار انداز میں نہ ہوئی تو معمر افراد سمیت دیگر کے لیے پروگرام کے مطابق بروقت ویکسین لگانے کا عمل متاثر ہو سکتا ہے۔