جی سیون مالیاتی اجلاس میں کورونا وائرس کی عالمی وبا پر تبادلہ خیال

گروپ آف سیون ممالک کے وزرائے خزانہ اور مرکزی بینکوں کے گورنروں نے کورونا وائرس کی عالمی وبا کے معاشی مضمرات سے نبرد آزما ہونے کی راہوں پر تبادلہ خیال کیا ہے۔

رواں سال کے جی سیون (گروپ آف سیون) اجلاسوں کی میزبانی برطانیہ کر رہا ہے۔

امریکی وزیر خزانہ جینیٹ یِلن کے گزشتہ ماہ منصب سنبھالنے کے بعد یہ انکی پہلی ٹیلی کانفرنس تھی۔

جاپانی وزیر خزانہ آسو تارو نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ کم آمدنی والے ممالک کے لیے قرضوں سے متعلق امدادی اقدامات بات چیت کا حصہ تھے۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ بعض دیگر ممالک کی نسبت جاپان میں انفیکشنز کی سطح کم رہی ہے۔

انہوں نے بعد از عالمی وبا، ڈھانچہ جاتی تبدیلیوں جیسی اپنے ملک کی کئی اندرونی ترجیحات کے تعین اور گرتی ہوئی شرح پیدائش و عمر رسیدہ ہوتی آبادی جیسے مسائل سے نمٹنے کو ترجیحی حیثیت دینے کا بھی ذکر کیا۔

عالمی وبا کے علاوہ مالیاتی رہنماؤں نے گلوبل ہائی ٹیک کمپنیوں کے لیے ٹیکسیشن کے نئے قواعد پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

جناب آسو نے امید ظاہر کی کہ امریکہ اور یورپ عنقریب کسی اتفاقِ رائے پر پہنچ سکیں گے۔