موری کے کلمات انتہائی نا مناسب ہیں: بین الاقوامی اولمپک کمیٹی

بین الاقوامی اولمپک کمیٹی نے ٹوکیو آرگنائزنگ کمیٹی کے سربراہ کے حالیہ بیان کی مذمت کی ہے جس میں کہا گیا تھا کہ اجلاسوں میں خواتین حد سے زیادہ بولتی ہیں۔ بین الاقوامی اولمپک کمیٹی نے اس تبصرے کو ہر لحاظ سے نا مناسب قرار دیا ہے۔

اس کمیٹی کے منگل کو جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ جناب موری یوشیرو کے فقرے، بین الاقوامی اولمپک کمیٹی کی ذمہ داریوں اور اولمپک ایجنڈا 2020 اصلاحات کے صریحاً برعکس تھے۔

کمیٹی کا کہنا ہے کہ وہ، اولمپک چارٹر کے مطابق، ہر سطح اور ہر انداز کے کھیلوں میں خواتین کے فروغ کی حوصلہ افزائی کے اپنے مشن کو آگے بڑھانے کے لیے کمر بستہ ہے۔

کمیٹی کا کہنا ہے کہ وہ، ٹوکیو آرگنائزنگ کمیٹی اور دیگر اداروں کی اُس حد تک حمایت کرنے کے لیے تیار ہے جو انکی ذمہ داریوں کی حدود کے اندر انکے مقاصد کے دائرے میں آتے ہوں۔

گزشتہ بدھ کے روز جناب موری نے جاپانی اولمپک کمیٹی کے ایک اجلاس میں کہا تھا کہ بورڈ اجلاسوں میں خواتین وقت برباد کرتی ہیں کیونکہ وہ بہت باتونی ہیں۔

تاہم اگلے روز انہوں نے معذرت کرتے ہوئے اپنے الفاظ واپس لے لیے تھے۔ اُس موقع پر بین الاقوامی اولمپک کمیٹی نے این ایچ کے کو بتایا تھا کہ اسکے نزدیک معاملہ ختم ہو چکا ہے۔

تاہم انکے کلمات پر جاپان اور بیرونی دنیا، کھلاڑیوں، اور اسپانسر کمپنیوں کی جانب سے شدید تنقید کا سلسلہ جاری ہے، جس میں کہا جا رہا ہے کہ یہ کلمات اولمپکس کی روح کے خلاف ہیں۔