ایران میں لوگوں کو روسی کورونا وائرس ویکسین دیے جانے کا آغاز

ایران میں کورونا وائرس ویکسین لگانے کا آغاز ہو گیا ہے۔ یہاں اس وائرس سے مشرق وسطیٰ میں سب سے زیادہ اموات ہو چکی ہیں۔

منگل کو ملک کے دارالحکومت میں جب ویکسین لگانے کا آغاز ہوا تو سب سے پہلے طبی کارکنان کو ٹیکے لگانے کا عمل شروع ہوا۔

لوگوں کو روس کی تیار کردہ اسپُوٹنِک وی ویکسین کے ٹیکے لگائے جا رہے ہیں۔

ایران نے امریکہ کی تیار کردہ ویکسین پر پابندی عائد کر رکھی ہے جسے ملک کے سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنائی ناقابلِ اعتماد قرار دیتے ہیں۔

ایران، روس اور چین سے ویکسین درآمد کرتے ہوئے خود اپنی ویکسین تیار کرنے کی کوششوں میں مصروف ہے۔

امریکہ کے ساتھ اس ملک کی سیاسی محاذ آرائی نا صرف ایرانی لوگوں کے معاش بلکہ عوام کو کورونا وائرس سے بچانے کی کاوشوں کو بھی متاثر کر رہی ہے۔