جاپان کی CO2 میں کٹوتی کیلئے امونیا ایندھن استعمال کرنے کی منصوبہ بندی

حکومت جاپان اور کاروباری شعبے نے تھرمل بجلی گھروں کیلئے ایندھن کے طور پر امونیا استعمال کرنے کی غرض سے منصوبے وضع کیے ہیں۔

امونیا جلائے جانے پر کاربن ڈائی آکسائیڈ خارج نہیں کرتی۔ حکومت CO2 کا اخراج کم کرنے کی اپنی کوششوں میں اسے ہائیڈروجن کے ساتھ اگلی نسل کا جدید ایندھن سمجھتی ہے۔

وزارتِ زراعت کے حکام، الیکٹرک پاور کمپنیوں اور مشینری ساز اداروں نے پیر کے روز منصوبے مرتب کیے ہیں۔

ان منصوبوں میں کہا گیا کہ کوئلے کے ساتھ امونیا کو جلانے کیلئے ٹیکنالوجی تیار کر کے 2030ء میں 30 لاکھ ٹن سالانہ امونیا استعمال کی جائے۔

وہ سال 2050ء تک امونیا کا استعمال بڑھا کر 30 لاکھ ٹن سالانہ کرنے کا منصوبہ بھی رکھتے ہیں۔ اس ہدف کو اُن بجلی گھروں پر انحصار کے ذریعے حاصل کیا جائے گا جو صرف امونیا جلاتے ہیں۔