شمانے پریفیکچر کےغیرملکی رہائشیوں کی صحت کی بہبود کے لیے اقدامات

مغربی جاپان کا شِمانے پریفیکچر کورونا وائرس کے پھیلاؤ کے تناظر میں غیرملکی رہائشیوں کو طبی دیکھ بھال کے حصول کی راہ میں پیش آسکنے والی لسانی اور دیگر رکاوٹوں کو دور کرنے کے اقدامات کر رہا ہے۔

اس پریفیکچر کے دفاتر اور طبی اداروں کے تقریباً 30 عہدیداروں نے جمعہ کے روز ماتسُواے شہر میں ملاقات کی ہے۔ ان کو ایسی صورتوں کی تفصیل بتائی گئی جب ڈاکٹر، جاپانی زبان نہ جاننے والے غیر ملکیوں کے معائنوں سے انکار کر دیتے ہیں یا پھر غیر ملکی افراد جاپان کے صحت نظام سے ناواقف ہوتے ہیں۔

پریفیکچر کے حکام نے وضاحت کی کہ ایسے مرکزی طبی ادارے جو غیر جاپانی افراد کو قبول کریں انہیں ترجمے کی سہولت سے آراستہ ٹیبلٹس کی لاگت یا پھر کثیر زبانوں میں علامات نصب کروانے کے لیے مکمل اعانتیں مل سکتی ہے۔

پریفیکچر کے طبی پالیسی کے شعبے کے گروپ سربراہ تیراموتو ناؤفُومی نے کہا کہ غیر ملکی رہائشیوں کی تعداد میں ہر سال اضافہ ہو رہا ہے۔ انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ معاملے سے نمٹنے کے لیے متعلقہ اداروں کے ساتھ ذمہ داری بانٹی جائے گی اور مل کر کام کیا جائے گا۔