جاپان میں گھریلو اخراجات میں ریکارڈ شرح سے کمی

جاپان میں کورونا وائرس کی عالمی وبا کے باعث آمدنی اور خریداری کم ہونے کی وجہ سے گزشتہ سال گھرانوں کے اخراجات میں ریکارڈ رفتار سے کمی ہوئی۔

امور داخلہ کی وزارت کے ایک جائزے کے مطابق سنہ 2020 میں دو یا دو سے زائد افراد پر مشتمل گھرانے، نے ماہانہ اوسطاً لگ بھگ 2 لاکھ 80 ہزار ین یا تقریباً 2 ہزار 6 سو ڈالر خرچ کیے۔

جاپانی کرنسی ین کے اعتبار سے یہ سنہ 2019 کے مقابلے میں 5.3 فیصد کم ہے۔ سنہ 2001 سے تقابلی اعداد وشمار کی دستیابی کے بعد یہ سب سے بڑی کمی بھی ہے۔

عوام نے سفر، نقل و حمل، اور گھر سے باہر خورد و نوش پر کہیں کم رقوم خرچ کیں۔ تاہم کمروں میں ہوا کی نمی کو درکار سطح پر رکھنے والے آلات، کمروں کی ہوا صاف رکھنے والے آلات اور کھانا پکانے کے برتنوں وغیرہ جیسے گھریلو ساز و سامان پر خرچ میں اضافہ ہوا۔