ہنگری کے وزیر اعظم صدر شی سے مذاکرات کیلیے چین میں

چین کے سرکاری ذرائع ابلاغ نے پیر کے روز خبر دی ہے کہ صدر شی جن پنگ نے، ہنگری کے وزیر اعظم وکٹر اوربان کے دورۂ چین کے موقع پر ان سے بات چیت کی ہے۔

چینی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ رہنما "باہمی دلچسپی کے امور پر تفصیلی مذاکرات" کے لیے تیار تھے۔

جناب اوربان نے پیر کی صبح سوشل میڈیا پر ایک تصویر پوسٹ کی، جس میں وہ ایک طیارے کے سامنے چین کی نائب وزیر خارجہ باور کی جانے والی خاتون کے ساتھ بات کرتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں۔ انکی پوسٹ کا ہیش ٹیگ بیجنگ ہے۔

ہنگری کے رہنما اپنے روس نواز موقف کے لیے معروف ہیں۔ انہوں نے گزشتہ منگل کے روز کیف میں یوکرین کے صدر وولودیمیر زیلنسکی اور جمعہ کو ماسکو میں روسی صدر ولادیمیر پوٹن سے ملاقات کی تھی۔

ہنگری نے جولائی کے آغاز میں یورپی یونین کی صدارت کی اپنی باری سنبھالی ہے۔

اوربان نے امن کے لیے کوششیں کرنے کا عہد کیا ہے۔ لیکن یوکرین کی حکومت نے کہا کہ ان کا دورۂ روس، کیف کے ساتھ کسی اتفاقِ رائے یا ہم آہنگی کے بغیر کیا گیا۔

چین اور روس دونوں گزشتہ ماہ یوکرین میں قیامِ امن سے متعلق منعقدہ بین الاقوامی کانفرنس سے غیر حاضر تھے۔ بیجنگ نے عندیہ دیا ہے کہ وہ یوکرین کے حوالے سے اپنا موقف خود اختیار کرے گا۔

مبصرین اس بات پر توجہ مرکوز رکھیں گے کہ اوربان اور شی اپنی ملاقات میں یوکرین کے بارے میں کیا کہتے ہیں۔