جاپان میں ڈیمنشیا میں مبتلا 19000 سے زائد افراد لاپتہ

جاپان میں پولیس کا کہنا ہے کہ گزشتہ برس ڈیمنشیا یا ممکنہ طور پر ڈیمنشیا میں مبتلا 19 ہزار سے زائد افراد، کم از کم عارضی طور پر لاپتہ ہوئے جبکہ 500 سے زائد افراد مردہ پائے گئے۔

نیشنل پولیس ایجنسی کے اعداد و شمار کے مطابق 2023 میں ملک بھر سے لاپتہ ہونے والے 19,039 افراد کے بارے میں رپورٹیں موصول ہوئیں جو ایک سال قبل کے مقابلے میں 330 زیادہ ہیں۔

یہ تعداد سال 2012 میں ایجنسی کی جانب سے اعداد و شمار رکھنے کے آغاز کے بعد سے سب سے زیادہ ہے۔

اعداد و شمار کے مطابق مذکورہ سال کے دوران 18175 افراد یا مجموعی تعداد میں سے 95 فیصد زندہ مل گئے۔ تاہم 502 افراد کی ہلاکت کی تصدیق ہوئی اور سال کے اختتام تک 250 افراد لاپتہ تھے۔

پریفیکچروں کے اعتبار سے ہیوگو 2094 افراد کے ساتھ پہلے، اوساکا 2016 افراد کے ساتھ دوسرے جبکہ سائیتاما 1912 افراد کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہا۔

پولیس اس مسئلے سے نمٹنے کے لئے مقامی حکومتوں اور برادریوں کے ساتھ تعاون بڑھا رہی ہے کیونکہ گزشتہ دہائی کے دوران لاپتہ افراد کی تعداد میں تقریبا 80 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔