زیلنسکی کا تنازعے کے خاتمے کے لیے سال کے آخر تک 'جامع منصوبے' کا اشارہ

یوکرین کے صدر وولودیمیر زیلنسکی نے عندیہ دیا ہے کہ روس کے ساتھ تنازعے کے خاتمے کا منصوبہ اِس سال کے آخر تک تیار کر لیا جائے گا۔

اُنہوں نے جمعے کے روز کِیف میں کہا "ہمارے لیے جنگ کے خاتمے کی غرض سے ایک ایسا منصوبہ دکھانا بہت ضروری ہے جس کی حمایت دنیا کی اکثریت کرے گی"۔

زیلنسکی نے امن کے لیے منصوبہ تیار کرتے ہوئے روسی جارحیت کا طاقت کے ذریعے مقابلہ کرنے کی اہمیت پر زور دیا۔

اُنہوں نے کہا "میدانِ جنگ میں مضبوط ہونے اور ایک واضح، تفصیلی منصوبے کی تیاری" کا کام متوازی طور پر کیا جانا چاہیے۔

زیلنسکی نے تفصیلات کے بارے میں بات نہیں کی۔ قیاس آرائیاں کی جا رہی ہیں کہ یہ منصوبہ، یوکرین میں امن قائم کرنے کے موضوع پر بین الاقوامی رہنماؤں کے مستقبل کے اجلاسوں میں بات چیت کو جنم دے سکتا ہے۔

دوسری جانب، روس مطالبہ کر رہا ہے کہ یوکرین امن مذاکرات شروع کرنے کی شرط کے طور پر اُن چار علاقوں سے اپنی فوجیں نکال لے جن کا روس نے یکطرفہ طور پر الحاق کر لیا ہے۔