شمالی جاپان میں میز الٹا کر غصہ نکالنے کا مقابلہ

جاپان میں مختلف عمر کے لوگ ایک انوکھے مقابلے میں شریک ہوئے ہیں، جس میں وہ اپنی تمنا یا مایوسی کے اظہار کے لیے کھانے کی چوکی نما میز کو الٹا دیتے ہیں۔

یہ مقابلہ جاپان کے ایک شمالی پریفیکچر اِیواتے میں ہفتے کے روز منعقد ہوا ہے۔

پریفیکچر کے یاہابا قصبے میں ایک کاروباری گروپ کے نوجوان اراکین نے اس قصبے کی ازسرِ نو بحالی کی امید میں اس سالانہ تقریب کا اہتمام کیا ہے۔

اس سال دو سے 74 سال کی عمر کے تقریباً 30 شرکاء نے 40 سینٹی میٹر کی چوکور میز پلٹتے ہوئے ایک دوسرے سے مقابلہ کیا۔

انہوں نے منفرد ملبوسات اور انوکھے جملوں کے ساتھ یہ مقابلہ کیا کہ میز پر پڑی کھلونا ساؤری مچھلی کتنی دور جاتی ہے۔

ایک شریک نے چیخ کر کہا "اپنی جرابوں کو ادھر ادھر نہ چھوڑیں" ایک چلایا "میں وزن کم کرنا چاہتا ہوں" جبکہ کسی نے کہا کہ "ہوم ورک زیادہ ہے"۔

تماشائی بہت ہنسے، تالیاں بجائیں اور تقریب سے خوب لطف اندوز ہوئے۔