یرغمالی چھڑانے کی کارروائی میں اسرائیل نے 274 فلسطینی شہید کر دیئے: غزہ حکام

غزہ میں صحت حکام کا کہنا ہے کہ نُصیرات میں یرغمالیوں کی بازیابی کے لیے اسرائیلی فوج کی ہفتے کے روز کی کارروائی میں ہلاک ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد بڑھ کر274 ہو گئی ہے جب کہ 698 زخمی ہوئے ہیں۔

حماس کے زیر حراست چار اسرائیلی یرغمالیوں کو محصور علاقے کے مرکزی حصے سے ہفتے کی صبح 11 بجے شروع ہونے والی کارروائی میں اس وقت بازیاب کرا لیا گیا جب بہت سے لوگ بازار میں خریداری کے لیے باہر تھے۔

اسرائیلی فوج نے کہا کہ یرغمالیوں کو آزاد کرانے کی کوشش کے دوران اس کے فوجیوں کی حماس کے جنگجوؤں کے ساتھ شدید مسلح جھڑپیں ہوئیں۔ فوج نے کہا کہ اس نے فضائی حملہ بھی کیا ہے۔

حماس کے عسکری شعبے نے اسی روز ایک ویڈیو جاری کی تھی، جس میں دعویٰ کیا گیا تھا کہ اسرائیلی کارروائی سے متعلقہ تین اسیروں کو ہلاک کر دیا گیا ہے اور یہ کہ ان میں سے ایک کے پاس امریکی شہریت تھی۔

اسرائیلی فوج نے اتوار کے روز بھی غزہ کے وسطی اور جنوبی علاقوں میں فضائی حملے اور بّری کارروائیاں جاری رکھیں۔

غزہ میں صحت حکام نے اعلان کیا کہ گزشتہ سال اکتوبر میں موجودہ تنازع شروع ہونے کے بعد سے اب تک ہلاکتوں کی تعداد 37 ہزار 84 ہو گئی ہے۔