شمالی کوریا نے جنوبی کوریا کی جانب کچرے سے بھرے 300 سے زائد غبارے چھوڑے ہیں

جنوبی کوریا کی فوج کا کہنا ہے کہ شمالی کوریا نے ہفتے کی رات سے اب تک کچرے سے بھرے 300 سے زائد غبارے جنوبی کوریا کی جانب چھوڑے ہیں۔

جوائنٹ چیفس آف اسٹاف نے کہا کہ انہوں نے شمالی کوریا کی جانب سے روانہ کردہ تقریباً 330 غباروں کا سراغ لگایا ہے، جن میں سے کچھ دارالحکومت سیئول اور شمالی صوبے گیونگی سے ملے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق تقریباً 80 غبارے جنوبی کوریا کے اندر گرے ہیں۔ ملک کی فوج اور پولیس نے انہیں جمع کر لیا ہے۔

جنوبی کوریا کا کہنا ہے کہ ان غباروں میں کاغذ جیسا کچرا تھا اور کوئی خطرناک مواد نہیں ملا۔ اس نے مزید بتایا کہ بظاہر بہت سے غبارے سمندر اور پہاڑی علاقوں میں گرے ہیں۔

مئی کے بعد یہ تیسرا موقع ہے کہ پیانگ یانگ نے کچرے سے بھرے غبارے جنوبی کوریا کی جانب چھوڑے ہیں۔ واضح طور پر یہ جنوبی کوریا میں شمالی کوریائی منحرفین کے ایک گروپ کی جانب سے غباروں کے ذریعے بھیجے گئے پیانگ یانگ مخالف پمفلٹس کا بدلہ ہے۔

جنوبی کوریائی صدارتی دفتر نے اتوار کی صبح قومی سلامتی کونسل کا اجلاس منعقد کیا جس میں اس کا جواب دینے کے طریقوں پر تبادلۂ خیال کیا گیا۔