امریکی خلاباز بوئنگ اسٹارلائنر پر آئی ایس ایس پہنچ گئے

دو امریکی خلاباز اپنے بوئنگ اسٹارلائنر خلائی جہاز کو مدار میں محو گردش بین الاقوامی خلائی اسٹیشن، آئی ایس ایس سے جوڑنے کے بعد اُس میں داخل ہو گئے ہیں۔

سُنیتا ولیمز اور بیری "بُچ" وِلمور نے بدھ کو خلائی جہاز کی روانگی کے بعد 24 گھنٹے سے زیادہ سفر کیا۔ آئی ایس ایس پر موجود سات دیگر خلابازوں نے انکا خیرمقدم کیا۔ مذکورہ سات خلاباز SpaceX کے ڈریگن یا روسی سویوز کرافٹ پر سوار ہو کر اسٹیشن پر پہنچے تھے۔

توقع ہے کہ وِلیمز اور وِلمور اسٹارلائنر کے ذریعے زمین پر واپس آنے سے پہلے تقریباً ایک ہفتہ وہاں قیام کریں گے۔ بوئنگ کا کہنا ہے کہ اس کی ٹیم دونوں کو بحفاظت واپس لانے پر "توجہ مرکوز" کیے ہوئے ہے۔

NASA خلابازوں کو لانے لیجانے کا "باکفایت" ذریعہ تلاش کرنے کے لیے نجی کمپنیوں کے ساتھ شراکت داری کر رہا ہے۔ پچھلے چار سالوں سے، اس نے ڈریگن پر انحصار کیا ہے، لیکن اسٹارلائنر اسے ایک اور آپشن دیتا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ دو امریکی ساختہ خلائی جہازوں کا میسر ہونا، محفوظ "بیک اپ" فراہم کرتا ہے۔