تائیوان پر چین کے حملے کی صورت میں امریکی افواج کے استعمال کو مسترد نہیں کر رہا: بائیڈن

امریکی صدر جو بائیڈن نے کہا ہے کہ تائیوان پر چین کے حملے کی صورت میں وہ امریکی فوجی دستوں کے استعمال کے امکان کو رد نہیں کر رہے ہیں۔

جناب بائیڈن نے ان خیالات کا اظہار 28 مئی کو وائٹ ہاؤس میں ٹائم میگزین کے ساتھ ایک انٹرویو کے دوران کیا۔ اس جریدے نے انٹرویو کے مندرجات منگل کو جاری کیے ہیں۔

امریکی صدر نے کہا کہ انہوں نے چینی صدر شی جِن پنگ پر واضح کر دیا ہے کہ امریکہ تائیوان کی آزادی کے لیے کوشش نہیں کر رہا۔ انہوں نے کہا کہ امریکہ کی یہ پالیسی طویل عرصے سے چلی آ رہی ہے۔

لیکن انہوں نے کہا کہ حملے کی صورت میں وہ امریکی افواج کے استعمال کو مسترد نہیں کر رہے ہیں۔ اس سے پہلے صدر نے امکان ظاہر کیا تھا کہ بیجنگ کا بزور طاقت تائیوان کے ساتھ اتحاد قائم کرنے کی کوشش کیے جانے کی صورت میں امریکی فوج تائیوان کا دفاع کرے گی۔

جب ان سے پوچھا گیا کہ آیا امریکی فوج جاپان یا فلپائن میں اپنے اڈوں سے حملے کرے گی تو امریکی صدر نے جواب دیا، ’’میں اس معاملے پر بات نہیں کر سکتا‘‘۔