ہانگ کانگ میں تیانیمن اسکوائر کریک ڈاؤن کی 35ویں برسی، 4 گرفتار

ہانگ کانگ میں حکام نے بیجنگ میں تیانیمن اسکوائر پر ہونے والے جمہوریت نواز مظاہروں کے خلاف خونریز کریک ڈاؤن کی 35ویں برسی کے موقع پر چار افراد کو گرفتار کیا ہے۔

یہ گرفتاریاں منگل کے روز کی گئی ہیں۔ ایک پارک کے نزدیکی مقامات پر، جہاں ہانگ کانگ میں سالانہ تعزیتی تقریب کے لیے 4 جون کو لوگ جمع ہوتے تھے، سیکورٹی سخت کی گئی تھی۔ حکومت کے کریک ڈاؤن کی وجہ سے یہ تقریب 2019 سے منعقد نہیں کی گئی ہے۔

ہانگ کانگ میں پولیس افسران کے مطابق 23 سے 69 سال کے درمیان عمر کے چار افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ایک 68 سالہ خاتون کو مارچ میں نافذ ہونے والے ہانگ کانگ کی قومی سلامتی کے نئے قانون کی خلاف ورزی کے شبے میں حراست میں لیا گیا ہے۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ مذکورہ خاتون نے سڑک پر چینی حکومت سمیت حکام کے خلاف نفرت آمیز نعرے بازی کی۔

حکام نے ایک جاپانی شخص سمیت پانچ دیگر افراد کو بھی محکمہ پولیس کی تحویل میں دیا ہے۔ لیکن بعد ازاں، مبینہ طور پر ان افراد کو رہا کر دیا گیا۔