جاپان میں سربراہ امریکی افواج کا عہدہ اپ گریڈ ہونے کا امکان

امریکی وزیر دفاع لائیڈ آسٹن نے جاپان میں تعینات امریکی افواج کے کمانڈر کے عہدے کو اپ گریڈ کرنے کا خیال ظاہر کیا ہے۔ یہ پیشرفت ایک ایسے وقت سامنے آئی ہے جب جاپان اپنی سیلف ڈیفنس فورسز، جے ایس ڈی ایف، میں ہم آہنگی پیدا کرنے کے لیے مشترکہ آپریشنز کمانڈ قائم کر رہا ہے۔

جناب آسٹن پیر کو سنگاپور میں صحافیوں سے گفتگو کر رہے تھے۔

ایک رپورٹر نے اپریل میں ہونے والے دو طرفہ سربراہی اجلاس میں امریکی اور جاپانی افواج کے کمانڈ اینڈ کنٹرول اسٹرکچر کو اپ گریڈ کرنے کے معاہدے کا حوالہ دیتے ہوئے مثالی ڈھانچے کے بارے میں دریافت کیا۔

جناب آسٹن نے جواب دیا کہ جاپان میں فور اسٹار کمانڈر کو تعینات کرنے یا نہ کرنے کا "جائزہ" لیا جا رہا ہے، لیکن اس بارے میں ان کے پاس کوئی اعلان نہیں ہے۔

جاپان میں تعینات امریکی افواج کی قیادت اس وقت لیفٹیننٹ جنرل کے عہدے پر تعینات کمانڈر کے پاس ہے۔ جنرل کے اپ گریڈڈ رینک کا افسر آپریشنل کمانڈ حاصل کرنے کا مجاز ہے۔

یہ اقدام ایک ایسے وقت سامنے آیا ہے جب جاپان اگلے سال مارچ کے آخر تک اپنی بری، بحری اور فضائی سیلف ڈیفنس فورسز کی مستقل مشترکہ آپریشن کمانڈ قائم کرنے کے لیے کام کر رہا ہے۔

پینٹاگون جاپان کے برابر سطح کے کمانڈر کی تعیناتی کے مقام اور دیگر معاملات کا جائزہ لے رہا ہے۔

یہ منصوبے بظاہر جاپان میں تعینات امریکی افواج اور جے ایس ڈی ایف کے درمیان کمانڈ اینڈ کنٹرول تعاون کو مضبوط بنانے کی کوششوں کا حصہ ہیں۔