یوکرینی صدر فلپائن کی حمایت پر مشکور اور تعاون کی تصدیق

یوکرین کے صدر وولودیمیر زیلنسکی نے یوکرین کی علاقائی سالمیت اور خودمختاری کی حمایت کرنے پر فلپائن کے رہنما کا شکریہ ادا کیا ہے۔ انہوں نے اپنے ملکوں کے درمیان تعاون کی تصدیق کی۔

صدر زیلنسکی نے پیر کے روز منیلا میں فلپائن کے صدر فرڈینینڈ مارکوس جونیئر سے ملاقات کی۔ صدر زیلنسکی اس سے پہلے سنگاپور میں اُس ایشیائی سلامتی کانفرنس میں شرکت کر رہے تھے جسے شنگری-لا ڈائیلاگ کہا جاتا ہے۔

سنگاپور میں، انہوں نے ممالک پر زور دیا کہ وہ یوکرین میں جنگ کے خاتمے کی خاطر سوئٹزرلینڈ میں جون کے وسط میں منعقد ہونے والے امن سربراہ اجلاس میں شرکت کریں تاکہ انکے پیش کردہ امن منصوبے کو عملی شکل دینے کی کوشش کی جا سکے۔

صدر زیلنسکی اور صدر مارکوس کی یہ پہلی بالمشافہ ملاقات تھی۔ یہ سربراہ ملاقات ایسے وقت ہوئی ہے جب فلپائن کو بحیرۂ جنوبی چین میں چین کی بڑھتی ہوئی جارحانہ کارروائیوں کا سامنا ہے جہاں دونوں ممالک خودمختاری کا دعویٰ کرتے ہیں۔

صدر مارکوس نے کہا کہ دونوں ممالک کے مشترکہ مسائل کے لیے ملاقات کے انعقاد اور تبادلہ خیال کرنے پر انہیں مسرت ہے اور وہ مل کر آگے بڑھنے کے راستے تلاش کرنے کی توقع رکھتے ہیں۔

صدر زیلنسکی نے صدر مارکوس کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ وہ فلپائن آ کر خوش ہیں جو یوکرین کی علاقائی سالمیت اور خودمختاری کی حمایت کرتا ہے۔

صدر مارکوس نے امن کو فروغ دینے، جنگ کے سیاسی حل تک پہنچنے اور لڑائی کے خاتمے کے لیے ہر ممکن کوشش جاری رکھنے کا عہد کیا۔