سہ فریقی عمل کے احیاء کے لیے سربراہی اجلاس اہم موقع تھا: کشیدا

جاپانی وزیر اعظم کشیدا فومیو کا کہنا ہے کہ جاپان، چین اور جنوبی کوریا کا سربراہی اجلاس، سہ فریقی عمل کے احیاء کو مستحکم کرنے کا ایک اہم موقع تھا۔

کشیدا نے اگلے سہ فریقی سربراہی اجلاس کے لیے تینوں ممالک کے درمیان تعلقات کو مزید فروغ دینے کا بھی عزم ظاہر کیا، جس کی صدارت جاپان کرے گا۔

کشیدا نے کہا کہ بین الاقوامی برادری کو متنوع، پیچیدہ اور ایک دوسرے سے مشروط چیلنجوں کا سامنا ہے اور جاپان، چین اور جنوبی کوریا میں کم شرح پیدائش اور عمر رسیدہ آبادی جیسے مشترکہ مسائل بھی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ علاقائی امن اور خوشحالی، تینوں ممالک کی ایک اہم ذمہ داری ہے۔ انہوں نے کہا کہ اجلاس میں انہوں نے وسیع شعبوں میں تعاون کو فروغ دینے کے اپنے عزم کا اعادہ کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے کئی دہائیوں قبل شمالی کوریا کے ہاتھوں اغوا کیے گئے جاپانی شہریوں کے معاملے کے جلد حل کے لیے تعاون کی درخواست کی۔ انہوں نے بتایا کہ انہیں اس درخواست پر مفاہمت حاصل ہوئی ہے۔