جاپان میں شکاریوں کو رہائشی و تجارتی علاقوں میں ریچھ پر گولی چلانے کی اجازت ملنے کا امکان

ماہرین پر مشتمل ایک جاپانی حکومتی پینل کی مرتب کردہ تجویز میں کہا گیا ہے کہ شکاریوں کو پولیس کے حکم کے بغیر رہائشی اور آبادی والے دیگرعلاقوں میں ریچھوں پر فائرنگ کرنے کی اجازت دی جائے۔

وزارت ماحولیات کے مطابق گزشتہ مارچ میں ختم ہوئے سال کے دوران ملک بھر میں ریچھوں کے حملے سے متاثر ہونے والے افراد کی تعداد 219 تک پہنچ گئی جو ریکارڈ بلند ہے۔

وزات نے مزید کہا ہے کہ گزشتہ دسمبر میں 67 فیصد حملے ایسے مقامات پر ہوئے جہاں لوگوں کی رہائش تھی یا وہ وہاں کام کرتے تھے۔

جاپان میں عام لوگوں کو ریچھوں کو مارنے کے لیے شکاریوں پر انحصار کرنا پڑتا ہے۔

لیکن شکار کا لائسنس رکھنے والوں کو اصولی طور پر قانون رہائشی علاقوں اور تجارتی مقامات پر آتشیں اسلحہ استعمال کرنے کی اجازت نہیں دیتا کیونکہ اس میں خطرات بہت زیادہ ہیں۔

شکاری ایسے ہتھیاروں کو ان علاقوں میں صرف اس صورت میں استعمال کر سکتے ہیں جب انہیں پولیس کے احکامات موصول ہوں یا وہ اس نتیجے پر پہنچیں کہ ہنگامی ردعمل کی ضرورت ہے۔