خارکِیف کے ایک اور گاؤں پر روس کا قبضہ، زیلنسکی چوکنّا

روس کی وزارتِ دفاع نے کہا ہے کہ اُس کی فورسز نے مشرقی یوکرین کے علاقے خارکِیف میں ایک اور گاؤں کا کنٹرول سنبھال لیا ہے۔

ہفتے کے روز اس اعلان سے علاقے میں روس کے زیرِ قبضہ دیہات کی تعداد 13 ہو گئی ہے۔ قبل ازیں، وزارت نے کہا تھا کہ فورسز نے جمعہ تک کے ہفتے کے دوران 12 دیہات پر قبضہ کر لیا ہے۔

روسی فورسز اس ماہ کے شروع میں سرحد عبور کرنے کے بعد سے شمالی خارکِیف علاقے میں اپنی کاروائی کو تیز کر رہی ہیں۔

بتایا جاتا ہے کہ خارکیف میں روسی سرحد کے ساتھ واقع آبادیوں سے تقریباً دس ہزار افراد فرار ہو گئے ہیں۔

خارکیف کے گورنر کا کہنا ہے کہ ہفتے کے روز علاقے کے ایک رہائشی ضلعے پر روسی حملوں میں بچوں سمیت پانچ افراد زخمی ہو گئے۔

یوکرینی صدر وولودیمیر زیلنسکی نے خبر رساں ادارے اے ایف پی کو جمعہ کے روز دیے گئے ایک انٹرویو میں خارکیف پر روسی حملوں کے حالیہ سلسلوں کو "پہلی لہر" قرار دیا۔