جاپانی آبزرویٹری نے جیو میگنیٹک طوفان کی تصدیق کردی

جاپان کی موسمیاتی ایجنسی کا کہنا ہے کہ اس نے سلسلہ وار شدید نوعیت کے شمسی شعلوں کی اطلاعات کے بعد ایک جغرافیائی مقناطیسی طوفان کی تصدیق کی ہے، جو اصل میں زمین کے مقناطیسی میدان میں خلل ہے۔

ایجنسی کے حکام کا کہنا ہے کہ طوفان کا مشاہدہ اس کی جیو میگنیٹک مشاہدہ گاہ نے ہفتے کی صبح ایباراکی پریفیکچر کے اِشی اوکا شہر میں کیا۔

حکام کے مطابق طوفان ہفتے کے روز صبح 2 بجے سے کچھ دیر پہلے شروع ہوا اور صبح 9 بجے تک جیو میگنیٹزم کا اتار چڑھاؤ معمول کی روزانہ کی تبدیلی کے مقابلے میں دس گنا زیادہ ہو گیا۔

واضح رہے کہ اس سے قبل جاپان کے نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف انفارمیشن اینڈ کمیونیکیشن ٹیکنالوجی نے اطلاع دی تھی کہ بدھ سے جمعہ تک کے عرصے میں چھ بار انتہائی شدید درجے کے شمسی شعلے دیکھے گئے۔