فنڈ رپورٹس مقدمے کی سماعت میں آبے دھڑے کے خزانچی کا زیادہ تر الزامات کا اعتراف

جاپان کی مرکزی حکمران جماعت لبرل ڈیموکریٹک پارٹی (LDP) کے سب سے بڑے دھڑے کے چیف خزانچی نے اعتراف کیا ہے کہ انہوں نے سیاسی فنڈ رپورٹس میں لاکھوں ڈالر کی آمدنی ظاہر نہیں کی۔

ماتسُوموتو جُن اِچیرو پر الزام ہے کہ انہوں نے 2022 تک کے پانچ سالہ عرصے میں فنڈ ریزنگ تقریبات سے دھڑے کو ہونے والی 67 کروڑ 50 لاکھ ین، یا تقریباً 43 لاکھ ڈالر کی آمدنی ظاہر نہیں کی۔ ایک وقت تھا جب آنجہانی وزیراعظم آبے شِنزو اس دھڑے کے قائد تھے۔

استغاثہ نے ماتسوموتو پر یہ بھی الزام لگایا ہے کہ وہ رپورٹس میں اس بات کا ذکر کرنے میں ناکام رہے کہ مذکورہ دھڑے نے اپنے قانون سازوں کے دفاتر کو کک بیکس دیں جنکی مجموعی مالیت ظاہر نہ کردہ آمدنی کے تقریباً مساوی تھی۔

ماتسوموتو کے مقدمے کی سماعت جمعہ کو ٹوکیو ضلعی عدالت میں شروع ہوئی۔ انہوں نے عدالت کو بتایا کہ ان پر لگائے گئے زیادہ تر الزامات درست ہیں۔

استغاثہ نے اسکینڈل میں ملوث دس افراد کے خلاف الزامات عائد کیے ہیں۔ انہوں نے مذکورہ افراد پر سیاسی فنڈز کنٹرول قانون کی خلاف ورزی کا الزام لگایا ہے۔ ان میں سے ماتسوموتو پہلے فرد ہیں جنکے مقدمے کی سماعت شروع ہو گئی ہے۔

ان میں سے چار افراد پر مقدمہ نہیں چلایا جائے گا کیونکہ سمری عدالت انکے مقدمات کا فیصلہ کر چکی ہے۔ انہیں نقد جرمانے اور دیگر اقسام کے جرمانوں کی سزا دی جا چکی ہے۔