امریکی بحریہ کے ڈسٹرائر نے آبنائے تائیوان کو عبور کیا ہے

امریکی بحریہ نے اعلان کیا ہے کہ اس کے ایک تباہ کن جہاز نے آبنائے تائیوان کو عبور کیا ہے۔ اس پر چین نے احتجاج کیا ہے۔

امریکہ کے ساتویں بحری بیڑے نے کہا ہے کہ گائیڈڈ میزائل ڈسٹرائر یو ایس ایس ہالسے نے بدھ کے روز آبنائے تائیوان کو عبور کیا ہے۔

چین کی جانب سے تائیوان پر فوجی دباؤ بڑھانے پر امریکی بحریہ باقاعدگی سے ایسی بحری جہاز رانی کر رہی ہے۔

امریکی بحریہ کا کہنا ہے کہ یہ اقدام "تمام ممالک کے لیے بحری جہاز رانی کی آزادی کو برقرار رکھنے کے امریکی عزم کو ظاہر کرتا ہے"۔

چینی فوج کی ایسٹرن تھیٹر کمانڈ کے ترجمان نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ اس کی بحری اور فضائی افواج نے ڈسٹرائر کے ٹرانزٹ کے پورے عمل کی نگرانی کی اور چوکس رہے۔

اس نے چین کی خودمختاری کے ساتھ ساتھ علاقائی امن و استحکام کے تحفظ کا عہد کیا۔

تائیوان میں 20 مئی سے نئے صدر کے طور پر لائی چنگ تے کے عہدِ صدارت کا آغاز ہو نے والا ہے۔ چین انہیں علیحدگی پسند کے طور پر دیکھتا ہے۔