ڈسٹرائر کی آن لائن ویڈیو مستند ہونے کا امکان ہے: جاپانی وزارت دفاع

جاپان کی وزارت دفاع کو معلوم ہوا ہے کہ سوشل میڈیا پر پوسٹ کی گئی ایک ویڈیو جس میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ ایک جاپانی ڈسٹرائر کو ڈرون سے نشانہ بنایا گیا، ممکنہ طور پر مستند ہے۔

تقریباً 20 سیکنڈ پر محیط یہ فوٹیج مارچ کے آخر میں آن لائن پوسٹ کی گئی تھی۔ اس میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ ٹوکیو کے قریب واقع میری ٹائم سیلف ڈیفنس فورس کے ایک اڈے پر تعینات اِیزُمو ڈسٹرائر پر اڑنے والے ایک ڈرون نے اِسے نشانہ بنایا۔

ایسا لگتا ہے کہ ڈرون عقب سے اس جہاز کے قریب آیا اور ڈیک کے اوپر پرواز کی۔ اس وڈیو پر چینی ویڈیو شیئرنگ سائٹ bilibili کا نام درج ہے۔

ایس ڈی ایف کے اڈوں پر بغیر اجازت کے ڈرون اڑانا قانوناً ممنوع ہے۔

وزارت دفاع ویڈیو کے جعلی ہونے یا اسے ایڈٹ کیے جانے کا تعین کرنے کے لیے تجزیہ کر رہی تھی۔

وزارتی ذرائع کے مطابق تجزیے سے معلوم ہوا ہے کہ فوٹیج کے مستند ہونے کا قوی امکان ہے۔

اطلاعات کے مطابق وزارت اس ویڈیو کی مزید جانچ کرنے کا ارادہ رکھتی ہے تاکہ یہ معلوم کیا جا سکے کہ اسے کیسے فلمایا گیا۔