جاپان میں سو سال پرانی کارٹون فلم دریافت

جاپان میں حال ہی میں دریافت ہونے والی ایک اینیمے فلم، جو تقریباً ایک صدی قبل جاپان میں تخلیق ہوئی تھی، وہ اس صنعت پر نئی روشنی ڈال رہی ہے۔

ایک ماہر کا کہنا ہے کہ اس دور کی صرف چند فلمیں ہی آج تک محفوظ ہیں، لہٰذا حال ہی میں ملنے والی اس فلم سے اُس دور کی اینیمے تخلیقات کو سمجھنے میں بہت مدد ملے گی۔

فلم میں دکھایا گیا ہے کہ ایک بچہ کھانا کھانے کے لیے چھری کانٹا استعمال کر رہا ہے۔ اس میں ایک اور بچے کو ایک بیگ سے کچھ کھاتے ہوئے بھی دکھایا گیا ہے۔

یہ خاموش فلم لگ بھگ 1923ء میں بنائی گئی تھی۔ یہ سنیما کے ایک آنجہانی مداح کے سامان میں سے دریافت ہوئی ہے۔

کہا جاتا ہے کہ یہ فلم ایک ایسی کمپنی نے تیار کی جو ٹوتھ برش اور روزمرہ استعمال کی دیگر اشیائے ضرورت فروخت کرتی تھی۔

اس فلم کو موجودہ دور کی کمپنی لائین نے محفوظ کیا ہےاور ان کا کہنا ہے کہ اس فلم پر لکھا نام ’’کِتایاما سےتارو‘‘ ہے۔

کِتایاما 20 ویں صدی کے اوائل کے اینیمیشن تخلیق کار تھے۔ انہوں نے ایک اینیمیشن کمپنی کی بنیاد رکھی تھی جس نے انڈسٹری کے چند معروف فنکاروں کو تیار کیا۔ تاہم کِتایاما کی تخلیق کردہ چند ہی فلمیں آج باقی ہیں۔

اس فلم کا نام ’’ڈینٹل ہیلتھ‘‘ ہے۔ ساڑھے 8 منٹ طویل اس اینیمیے کو تعلیمی فلم کے طور پر بنایا گیا تھا تاکہ دانتوں میں کیڑا لگنے سے بچاؤ کے لیے شعور اجاگر کیا جا سکے۔