جاپان اور پیراگوائے طاقت کے ذریعے موجودہ حیثیت میں یکطرفہ تبدیلی کے مخالف

جاپان کے وزیراعظم کشیدا فومیو اور پیراگوائے کے صدر سانتیاگو پینا نے تصدیق کی ہے کہ یکطرفہ طور پر طاقت کے ذریعے موجودہ حیثیت تبدیل کرنے کی کوششوں کو برداشت نہیں کیا جائے گا۔

کشیدا اور پینا کی ملاقات جمعہ کو پیراگوائے کے دارالحکومت آسنسیون میں ہوئی۔ جاپانی وزیراعظم 2021 میں اقتدار سنبھالنے کے بعد پہلی بار جنوبی امریکہ کا دورہ کر رہے ہیں۔

یہ ملاقات چین کی خود کو منوانے کی بڑھتی ہوئی سرگرمیوں کے تناظر میں ہوئی ہے۔ پیراگوائے جنوبی امریکہ کا واحد ملک ہے جس کے تائیوان کے ساتھ سفارتی تعلقات ہیں۔

دونوں رہنماؤں نے تخفیف اسلحہ اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں اصلاحات پر مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا۔

انہوں نے تصدیق کی کہ ان کے ممالک خلائی ترقیاتی تعاون کا پروگرام شروع کریں گے جس میں متعلقہ صنعت، حکومت اور تعلیمی اداروں کا اشتراک ہو گا۔

انہوں نے اس بات پر اتفاق کیا کہ تجارت اور سرمایہ کاری کو فروغ دینے کے معاہدے کو جلد از جلد مکمل کرنے کی ضرورت ہے۔

کشیدا اور پینا نے اس بات پر بھی اتفاق کیا کہ جاپان اور جنوبی امریکی اقتصادی بلاک مرکوسور اپنے اقتصادی تعلقات کو مضبوط بنانے کے طریقوں کا جائزہ لیں گے۔ مرکوسور کے ارکان میں پیراگوائے اور برازیل شامل ہیں۔

کیشیدا نے ایک مشترکہ نیوز کانفرنس میں کہا کہ ایسے وقت جب بین الاقوامی برادری کو پیچیدہ بحرانوں کا سامنا ہے، جاپان آزادی اور جمہوریت جیسی اقدار کا اشتراک کرتے ہوئے پیراگوائے کے ساتھ تعاون کو مضبوط کرنے کی امید رکھتا ہے۔