جاپان کی شرحِ بیروزگاری بدستور 2.6 فیصد

مارچ میں ختم ہونے والے مالی سال 2023 میں جاپان میں بیروزگاری کی اوسط شرح 2.6 فیصد رہی ہے۔ گزشتہ مالی سال کے مقابلے میں اس شرح میں کوئی تبدیلی نہیں آئی ہے۔

وزارت داخلی امور کے مطابق، برسر روزگار افراد کی تعداد 2 لاکھ 80 ہزار بڑھ کر اوسطاً 6 کروڑ 75 لاکھ سے تجاوز کر گئی ہے۔ مصنوعات سازی کی صنعت، ہوٹل اور طعام کے شعبے میں روزگار کے مواقع میں سب سے زیادہ اضافہ ہوا ہے۔

وزارت کے حکام کے مطابق، برسر روزگار افراد کی تعداد عالمی وبا سے تقریباً پہلے کی سطح پر پہنچنے کے ساتھ روزگار کے شعبے کی صورتحال بہتر ہوتی دکھائی دے رہی ہے۔

وزارت محنت کے ایک الگ سروے سے پتہ چلا ہے کہ درخواست دہندگان کے لیے ملازمت کے مواقع کا تناسب مارچ میں ملک بھر میں اوسطاً 1.28 تک پہنچ گیا تھا۔

یہ تناسب فروری کے مقابلے میں 0.02 پوائنٹس زیادہ تھا۔ اس کا مطلب ہے کہ ملازمت کے متلاشی ہر 100 افراد کے لیے ملازمت کے 128 مواقع دستیاب تھے۔

خدمات کی صنعت، تعلیمی تحقیق، اور تکنیکی مہارت کے متقاضی ملازمتوں کے مواقع میں گزشتہ سال کے مقابلے میں اضافہ ہوا ہے۔

لیکن مصنوعات سازی، تفریح اور تعلیم سمیت دیگر تمام شعبوں میں روزگار کے نئے مواقع کم ہوئے ہیں۔