جاپان کی جانب سے فلپائن کو گشتی فضائی نگرانی ریڈار نظام کی فراہمی

جاپان نے بحیرۂ جنوبی چین میں منیلا اور بیجنگ کے درمیان بڑھتی ہوئی کشیدگی کے دوران فلپائن کو ایک گشتی فضائی نگرانی ریڈار نظام فراہم کر دیا ہے۔

جاپان کے وزیرِ مملکت برائے دفاع اونِکی ماکوتو اور فلپائن کے وزیرِ دفاع گِلبرتو تیئودورو اُن عہدیداروں میں شامل تھے جنہوں نے پیر کے روز منیلا میں حوالگی کی تقریب میں شرکت کی۔

فلپائن کی حکومت نے جاپان کی سیلف ڈیفنس فورسز کے استعمال کردہ نظام کی بنیاد پر برآمدات کیلئے تیار کیے گئے ریڈار یونِٹس کی فراہمی کے لیے ایک بڑے جاپانی مصنوعات ساز کے ساتھ ایک معاہدے پر دستخط کیے ہیں۔

فلپائنی فوج کا کہنا ہے کہ یہ گشتی ریڈار، سمندر میں بحری جہازوں کے ساتھ ساتھ ڈرونز اور ہوائی جہازوں کا درست کھوج لگانے کی صلاحیت رکھتا ہے اور اِسے دور دراز جزائر جیسی جگہوں پر بہ آسانی تعینات اور استعمال کیا جا سکتا ہے۔

منیلا 2026ء تک جاپان سے کُل چار ریڈار نظام حاصل کرنے کا ارادہ رکھتا ہے۔

ہم خیال ممالک کو دفاعی آلات اور دیگر سازوسامان فراہم کرنے کے لیے جاپان کے نئے سرکاری سلامتی معاونت ڈھانچے کے تحت فلپائن کو سمندری نگرانی کے پانچ ریڈار نظام بھی ملنے والے ہیں۔