فرانس، بحیرہ جنوبی چین میں فلپائن اور امریکہ کی مشقوں میں شامل

فرانس پہلی بار بحیرہ جنوبی چین میں فلپائن اور امریکہ کی سالانہ فوجی مشقوں میں حصہ لے رہا ہے۔ یہ فلپائن اور چین کے درمیان متنازع پانیوں پر دعووں پر بڑھتی ہوئی کشیدگی کے دوران ہوا ہے۔

فلپائن، امریکہ اور اس کے شراکت داروں کے ساتھ سلامتی تعلقات کو فروغ دینے کی کوشش کر رہا ہے۔ جنوبی بحرالکاہل میں نوآبادیات کا حامل فرانس، چین کے بڑھتے ہوئے اثر و رسوخ کو روکنے کے لیے فلپائن کے ساتھ تعلقات مضبوط کرنے کی امید کر رہا ہے۔

رواں ہفتے شروع ہوئی بالیکاتان نامی ان مشترکہ مشقوں میں 16,000 سے زائد فوجی حصہ لے رہے ہیں۔ یہ 10 مئی تک جاری رہیں گی۔

فلپائنی بحریہ کے حکام نے بتایا کہ تینوں ممالک کے جہازوں نے منیلا کے خصوصی اقتصادی زون میں جمعرات کو مشقیں شروع کر دی تھیں۔ ان میں بحیرہ جنوبی چین کے وہ علاقے بھی شامل ہیں جن پر چین دعویٰ کرتا ہے۔

یہ پہلا موقع ہے جب بالیکاتان مشقوں میں فلپائن کے علاقائی پانیوں سے باہر اس طرح کی مشقیں شامل ہیں۔